وحدت نیوز، مجلس وحدت مسلمین گلگت بلتستان کے صوبائی صدر آغا علی رضوی نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ پاکستانی وفد کے دورہ اسرائیل کی گردش کرنے والی خبریں انتہائی تشویشناک اور پاکستان کی نظریاتی اساس پہ حملہ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اسرائیلی اخبارات میں پاکستان کے وفد کا دورہ اسرائیل اور پاکستان و اسرائیل کے مابین تعلقات قائم کرنے کی کوششوں کا ذکر اگر مبنی بر حقیقت ہے تو یہ ناقابل برداشت عمل ہے۔ امپورٹڈ حکومت سے بعید بھی نہیں، کیونکہ امریکہ کی خوشنودی اور اپنی حکومت کو طول دینے کے لیے کسی حد تک بھی جا سکتی ہے۔

وطن عزیز پاکستان کو نظریاتی اصولوں سے دور کرنے کی کوشش دراصل ملک دشمنی ہے۔ پاکستان کا اصل وہ نظریہ جس کی بنیاد پر یہ عظیم ملک قائم ہے۔ بانی پاکستان نے بھی اسرائیل اور پاکستان کے درمیان سرخ لکیر کھینچی ہے، اسے عبور کرنے والے فلسطینی مسلمانوں کے خون میں برابر کے شریک اور پاکستان کے دشمن تصور ہونگے۔ آغا علی رضوی نے مزید کہا کہ ریاستی اداروں کو چاہیئے کہ پاکستان کی اساس پر حملہ کرنے کی کوشش کرنے والوں کا رستہ روکیں، بصورت دیگر اسے وطن کی بقاء پر حملہ سمجھا جائے گا۔